ںاا [01 عم اتا ۱ ۲ ۰ : ۲ : ۴

لشراللهالرنٰ! زی

میستا الشر یت کانش۲۰۶۱ء

' ۱‏ 32 جلر ٢‏ ڈیمٹر ۳۳٢۳٣ے‏ جونح ۲۰۲۱ء ۹ بک می - ۱ ین ۱ عربب:حافظط مج شاکر تادری محاون:عبیر ال ر تی -- مضاممین ام اہ ٦‏ کم 2 7 مم 7 جا الٹشر لجہ ر۴ ں کیک ی/! مرمیاں : . ت7 حاح ااے یع کی یادں صفی ٢‏ ہہاے ۴ ۲ ۔ جانا لہ فا ایک لے ظٌ ا ۲ اج الش ری کی متولیت ۴ اما پر ائۓ مان الاشر ار ارک" ۱٢١۲ء‏ ۵۲ جا جا بیع کے مرش اجازت مو لا ابر بان | بی بل ری ےا ہصھ ف ۴ ۲ ۱ ك تال ماج ااشر بد فرش وا نے ےے موا ناش وت مین خاں تادرئی نوری _. : 7 رارحا شی ترضہ ہر ۸ منظومات * ٢۹‏ افکار خلا سلام ماج ال ۱ ر0 نع الہ نہ تہ .۔._._ ۰٭ا حیاة تاح ج الشریعة الشیخ محمد أختر رضا خاں (۶ك) __ ۲۰

درو ںگڑی یں

تن الاعلام جاح جع الشریعہ مت خر رضا خاں قاددئی از ہہ ری رص 2 اللہ تا ی علیہ رے

۰۷_ جال ۰٠۲۰ء‏ پر وز ہف دکیا شک امش ع رلک نتوں میں نا معفل نات اخ“ اور ”اح الشثریبہ کانفرٹس“ کو قد رکی گا سے دیکھا گیا ادن خپارک . بادو کا ساسل کی ما کک بای رہا۔

ک ھ4 ریب عرس کے بعد ہر اعرجکی ماہ نے

کے انا رکو مضرب جا عخاء ماپانہ حقل زکر اور ٹیش تک سلملہ شر و خغکیاگیاجو سال بص رجا رکید با۔ 7 ں تادرگی رضوی گے مومع 4 عاامہ عامر اخلال

ای مد خل ہکو خطاب کے لے جو کیاگیا۔ ا لدلد

جٹروں افرار نے تم نتریب میں رت ال یر سار اض صلی اللہ تعا ی علیہ و ا مد پر معفل سع بہاراں کا انعتقا دکیاعگیا اور لان ڈگ

خرو ر0 شی نے گزش سال عرس جاج الٹرید کا انعتاد

حافظ محمد شاکر قادری

ساج 7 اور ی مین شامر اہم ضف ٦‏ بر مسااہ دای کے حلوسونی گے

2 کے بج کیپ ایا پایاتہاں مت روبات اور انگ 14

انظا مک یاگیا تاد اض اح پگ تال ۴ بھی جا یاگیا۔ مخ لم ما ہو یں ش لیف اود اغیم الحاب بین صولانا خاوم بین رضوبی کے وصال لال پ نز تی ریف رف لص کی مقریب کے کے بہاوئی ور سے مولانا سید ام اہ بناری برع لہ العا ی کوعد گوگا یا۔نڑکی اعد اد جا ں خوام ایی نت ت نے ش رکم کیا ت0 ں مو پھ صولانا قلام حثوث لِد اوگیء مع من ضا *جناب الطاف پرلالی اور وم ملا مر تم وص طور ھت ریف لائے۔ لوم سینا صد بح ابر شی اللہ عنہ اور ع رس خواجہ کے مو پر مولانا مس راع الین انت رالقادرکی لہ نے نخطاب رمایا۔ ا۲ س کے علادہ حم مھ کے زیر اجقام در بر وگر ام عق ہوک عوام کے لیے لیم وت یت اور

س رگ فیو لکاذر لیدہ بے اعد رب الا ین_

اکیا سال ع رگ یگ لش یبن۴٢۴‏ جن بروز ہف ہورہی َ‫ کے می سا نار شستوں تل ہی

تار ام۲ جااشریے).. . حص رم8 بے اج شی نف رس( نطابات).. .. 8 10:307 ے مناتب مشا قادرب فات . .بے 11۳ ہے

میں ریادگاری مہ جاجع لشریعہکانفرنس ین میں مرش کا نفراس کے خطا۔ ت اور نقار یر الم

یا جاری ہیں ع رس جات الشریعہ کے مو جح پر پدیے

قا مین ہے٦‏ م قام احباب کے ممتون ہی یک انھوں

نے کاففرنس کے لیے یفاات دریئۓء مریدرین حاح ۱ شرع جخھوں نے مضاشن اور معقویات مر یں

مین حاع الشریعہ جنھوں نے می کے لے اشتار

۱ دسیئے اور دنر معاوخینن عر سکھیٹی وں ۓ مل ۱ افنظاءات کے لیے بروقت وس ا“ عویاک رد ےر

۲۳۷٣۷۳٣۷ 3101ء[10713[:11138۲373.‎ 0

مہ جا ج الش ری کا نف رض ۲۰۲۱ء

ا

الشدے ور نے رو اور کیگوں کے سا تج رہہ و

خطاب: تاج الشریعه مفی محمد اختر رضا خاں قدس سرہ

الحمدلله نحمدۂ و تستعینه و نستغفرہ و نومن بە و نتوکل عليه و نعوذ بالله من شرور انفسنا و من سیات اعمالنا من هد الله فلا مضلله و من یضلله فلا هادی لە و نشھد ان لااله الا الله وحدہ لاشریک لە و نشھد ان سیدنا و مولانا محمدا عبدہ و رسولە بالھدی و دین الحق ارسله صلی الله تبارک و تعا یٰ و علیٰ و الە و صحبه اجمعین و بارک وسلم ایدا۔ اما بعد فاعوذ بالله من الشیطن الرجیم۔ بسم الله الرحمٰن الرحیم۔ یاایھا الذین امنوا اتقوا الله وکونوا مع الصادقین“ صدق الله و مولانا العلی العظیم و بلغنا رسولە النی

الکریم و نحن علی ذلک لمن الشاھدین و ۔

الشاکرین و الأمنین و المطئنین و لموقنین و الحمد لله رب العلمین۔ ان اللّه و ملائکة یصلون علی النبی یایھا الذین امنوا صلوا عليه وسلموا اللھم صل علی سیدنا و مولانا محمد طب القلوب و دوائھا و عافیة الابدان و شفائھا و نور الابصار و ضیائٹھا و اله و صحبه وہارک وسلم۔ ےغوث اعظم بمن ے ان وساماتا مددے قبله دین مددے کعبه ایمان مددے انتظار کرم تست من عیف را اے خدا بین و خدا جود و خدادا مددے ا آصف میرالار(لاوی) نے ےکم اکہ ہج لحعت کے رڈ دوں ای نضرت تیم الہ ریت اضل رای شی لے جاک شال کے سا اس ۱ ائمداشد لک ہیں۔ بہت سمارے لوگ ان کے سلسلہ سے وابتتہ ہیں اور اع تحضر تکا معواملہ لو ےک وہ سی ضلملہ کے پچ ہی نین ہیں پنہ دہ ارام ال سنت ہیں ہر سلسلہ والا * جک سک ے621 ہ سی سے وہ اپنا انام ا ل۵ ٥۱ء‏ پناوویجتوان ۷ مات ے۔ الد

رک تال نے انی عیت بر کے می

04ء رد ہے۔ ال نکی محب تکا تی ایماے کید رکا لگ جاور ہے ہی کہ مائیں لک دہ شی مٹ نہیں سک ا لی کہا نکی عبت ار نے

00ء" کروی ہے۔ اور معاللہ نے فی کہ وہ آرٌمنا0 ۱/۸ ۱٢ہ‏ اور کی ہم ائعض ملا

ایک پان ہیں۔ اور انچ یی پان نیس ہیں بگ۔ہ ان

کے ملک اور دی نکی ا و ےا

ملک ابل سن تکیا ددع انام سک۴۱ قینرت ے۔ :

قرآ نکی مک ینیم ج می نے آی کر یھی بے اور سورہ فا تہ ا ق لیم ےک ؟ رلوگ ‏ زم الزن یں تنا قراط الْسَفیم“ ۸۱۱1٥۸! 1٥٥۷۸ 0 ٤ 1۹۳۷‏ 0او ر٭صراط الذین انعمت علیهم ۲٢٢۷ ٥٥ح ٥ما ٥‏ 0

٣‏ مان ےا اپم جن پراوجے اپنا اما مگیاء

"غیر المضوب علیہم؟ہ ہہ ٥ا ۸0٥‏ ٭عیصد جم ۵ءء محاب 6ا09 والضالین ۲۱٣۴۲‏ ٭ آم0 (غاہ )00٥ ٥0 ۲۷٢۸٢‏ لو "۰ا دہ ا د۷ہ بانص٦اءء”والضالین٥ہ١‏ 00 ا ها۷ ٣امہ٭ح‏ ٥ہ‏ ×۷۸ ۷ا ا نے راس پر ممت چلا جو تک گے بکنہ ان کے راستہ پچھ چلا ٹن پر قزنے اپنا اسان فمرایا۔ د کون لوگ ہیں جنپ الا ٰ ے انا اسان فرب پاورا نکی نلیمکا ھی اود یں بت ق رن کی شی ا ا وکیا ہہ اک طضرت سے سو می یل ر ہکا دا ے کے ند می ارات کا گاج وت تیرے نا مو ں کا تفش قدم ےراہ غد | وہکیا نیک کے جو یہ راغ لے کے مج جناں نے کا ان جار یا رگا تر ہے دہ ایا گے نی نۓء مہ را نشی کے یہ نی ےج چاریاروں اش ےی) ے عداوت

رکتتاے اس کے يیے کین سے پاجھ ار ارول کے راس سے ہکا ہو اے دالی سے ران شی ے سا بی ااایثازت ا کے و 0 2 می یس کے ے) جھ ار یا کاجاج والا سے اھر ت ال اکر و عمرو عتان ود حیدرکاچاجۓ والا ہے ان کے لیے ہے لا رتدٛے۔ یجنالا ےگایان جاز یا رک تر ٰ ا و79 اد باغ لے کے مل رین جان جنان و جہاں وہ نی لے ہارے اصیب یس تحوٹ ام و نام ک) مرخ کے کیپ ہلال جانور( گ ےگ و شمنت کی بر بای غوث انم کے نا مکی ہمارے نصیب مل ے او رگڑا ان ( دیو بنلریول )کے نسیب میں ٛے۔ اب افھوں ن ےڑا کھ اکر جن تکاخو اب د نیکھا۔ اع نظرت فرماتے ہیں کی انان اق ند جاں دہ می نے میں ججنون جناں سو زاغ نے کے مل : نی انز ج ےکوعاو تک شور ہبی ےکھا نے گل و راغ ہے کمے 4 رض ایامک عیب پائول می چچدے تم او رآ کہ اتا : دماح ہے کے طجلے یی کر روون سے لکل لکل روز 0““>“ ٗی ہے۔ می ری تقری رکا موضو) یہ ےکلہ شور سو ہم نے ہہ جاج ہی ںکہ ہم خیگوں سے راویلہ ٹیس رہیںء خگوں کے ساتھ یش رہیں۔ ای لیے ش نے بیہاں پر یہ آی تک بمہ پڑ یک ”یاایھا الذین امنو ااتقوا الله وکونوا مع الصادقین” اے اییمان والو! ابر ے ڈرتے رہو ”وکونوا مع الصادقین“ پچوں کے ساتھ میں رہ۔0 ۷۱٣٣ ٥'۵‏ ٭طا 200 ۱۱۸۸م ےوہ ١!ودہ+‏ نا‌طا ٠۰ا‏ أنالطانصا کچچوں کے سا تج بیل رر ہو۔ .1س میں ایر زوردے رہاوںلں کہ ف ان ے بتایا

۲۳۷٣۷٢٣۷ .10713[:113۲373[ .8310ء‎

"اگ سس

ج : ی۰ ے ہل ےکوی کے اور جھ نے من گل فائ وب طاہر القادرئی چم رکاپ یہاں آے تے۔ اکا ید موی رم

مطلب بس ےک ہ ہوںل مات ارہ کے

ےھ ل0 "٠‏ ژ2 کے سے کے

و چر١‏ ارک حا نے دبین پیر اکم رہد نے ء ت 7 مر .7

راہے ین رو عمے اور ”ستےی -:. خلت ۴ سا مھ ہنی

ے‫ مے : سے سر مم سے

دو کے و اد کے رسول میک ب یچ کے اور ار کے

رہ دا اب تازل مو اء ہو ٥ء‏ :اور اان کے راستتہ پر امت ےۓ تپ کے نراک ی (کرجی) 2 جا ۴ 1 ہے مم وج ہے مم 'وان لوگوں ے راس تر یلاء ان - سے .- م ےم ۳-4 :. ساتھ میں رک ہ مک جن پیر آونے ابنا اتسان فرمایاء چو کرے8 600111 ہیں اود چھ تر ے011" میں اور 7-2 7 7 1 نرے اولیاتے رام اود بجز گان دین ہیں ان کے سے پر نی مم مہم اق ۱ اھ لم ور ہو اوران ۓ راع جا۔

آر مآرگرجەنا× میٹ 1 لیم د یک ےک ه۶ چووزومرو یں کے اھ رئیں لے 5 اوں کے سیا مت کت مر رڑیں ا لک وج گیا ت سے ؟ بیج مم کودوضروں ے ال اور ممناز /,6 ٭ دن یں یہ تایاگیا ےک تم چچوں سے اپنارابہ رکوہ طز رگھون یارے دین شی ى پتاپاگیا ےک چو ںکی نل مکروہ یں می ال کی محبت کی اس کے مو لکی محبت لے 1 چو کی" یم نے ولک ام سے

نتظر بے کی اور ال٢‏ ٹل نمیم ہو سے ل

اور اگ ول سے رابطہ نتم :گیا تو یہ ر مو لکی بت

پوں سے را١ط‏ جج کے و الہ وا لے ہہو گے ۔ اور

نے بت ارب ہارں ے ے محت کر وگے ہپ

ری سے بی

ار سکوگے نہ الث دکی ج رر ملوے۔ اور جب یھ ھی ںکر سو کے تو وین عم او ہیں گا۔

ایم کر : رک اما سے اہ سے ہیں 1 ات11:00 رتا اے اور

4 ان چو و ںکو د۲ و۲ پ٤‏ اف سن شان نا یاے۔ ال حبارک تعالی نے ان کے راستہکواپنا عات تار دیا سے۔

01٤6‏ کاء

‫َ

یش کا 7 ۰ ۸ : :1 کے 7 ہیں ایا وٹ راست کی بنا یاہے۔ جکلہ ان بی کے راستہ م 7 سر و ان ! روں و اور ان ي پوں لیے ئووتءہك' او الیّہ ارک ھا نے رہ عواسشرت اورزں اطاعندءء اور 1 حادم 28 م رارداے ک پا ض ٥١‏ ٥٥۱۷م‏ ۸0 ر٤‏ الق ما ہہ ھا والا انا ےے۔۔ ائرم نے ہمارے اور ان( ہ دہایوں) کے

,ار رے یز ء اح پا ہیں

>ععت

اللہ اوت کا ادس ہکا اح یں کے_ عابتا ئی نہ بھیتاء نہ رسول کیتاء کس یکو ۴ کو مات ضرالا گرا ٭ مفرر کرماث مز زگا ان دن مق رکرح ای نے رین چاتاہرایت پید اک ٥۔‏ دہ ىہ قدرت رتا ےک نہیں رتا سار از نے یا نی ںکیابکنہ ہہ و لے مقر سے

ع الہ ایی ؟ ات کیہ ای یے جب لے عاجت ے سے ہر

ے ہب وجے ہم

شتتا نہیں ا ۸ وچ سے ہں۔ ری سے بی کیچ کہ ہم اکا دین کچیاات وا لے ۸ہ ں اور ہو ا کے :1۴9101011۷ ۱ اور

گے یں . ای کہ الد جارگ

ا تقمال یکنا ےک ے' ار واور ی کت ج با مکی کر گے۔ لو الند ارگ تما ی ۲ بی۱۸۸(000" کو 4

ٴ یں اور

٦

17ا10 بگمرے وو اللہ تمارک تما بی کے دی کا

کے و ہم و سراپا سراسر

می حا شر بی ہ اخ ص۳۰۶

٭7 0۸0 ؟

ناصحصہ ہم اا۱

َ‫ َ‫ ہے

۱ ند

ہے" -_- 7 ے- نے اوح واور امم جا پا د گت ہے

مم ہے مم - - صے ۳ ے َ۔- آض ]< ۱ - ا رم جھ ٠‏ وسا۔ واضیار ۸ے ہیں الہ عحاہی+ؤے کا یئ مم کٹ گا ١‏ ۔ 3 حارپ4 مھ ۹| 1 2 ہ٠‏ را ہے ٤>‏ ضھے :چا را ہے٤‏ مان گار گے ہب ۔ ۰ - ٠‏

آپي مدہ حاءنط× ,: صاجخہ حوہاء !مع ×۸عط ٥د‏ ٤ 2 2‏ صن ۹ھ 1 طانہ ںہ ١‏ مم- ہلا ے؟ لال ا0اہ

رسول ال ۔ صناسااخ لحم ےم عط ۴٥ہ‏ ںہ

ةا طاءنطك٭ حداتعدمہ × اجمفد سر آناجد

کو ےک 3۰ا۸ ٥٥‏ ع ۲ء 30_!٭ وم ۶ے مہ ہارہے۔ زەء 00١٤ا‏ داوںہہء آا [٤‏ لااله النّه؟ ےوہ ؟] جچادہ یردہ لااله اللہ د ۲۷ء ل1ءعدہء ٭ط عبط( جی 17 30۔ 2 ×٥×‏ ٥٥ز‏ :۱ء صدعء عمہ ہنم 5 6 111ص 1صنایں4( محمد الرسول الله _

ے سے ۰+ غع القیہ ہی بواوڑےۓے

جب ”مد الرسوںن ملران ضس یں ٹرآر رئے۔ اکناز 1٤0۱0‏ ۸۱0۷ (دزلص(٥٦)‏ صدح غدہدہےء ءط طام- ُوے ری 40٤ ٤‏ ۵ہ لا اله النّہ_ 1 1 ۱۷٢‏

5 1۲006 اط ا۴ک0 ظط ۱ز عمنصدم اکنا محمد الرسول الئہ ٤ 0٥۶‏ 1101ئں۸4 ع عر ٤ے‏

٥١ ء٥٥:‎ ٥٤ 27‏ ع مزمع ×× ٠ع‏ 1جط ۸ا۔

۵ ا ۵۲۵و دی ۵ناہ۷ ٥0‏ ,ی١‏ 56 0 101[وں4 محمد الرسول الله وز ۷۱) 00765 نظامطا *ط۱۸ آہ یےمصنعضچددصی 0دا ٢‏ 0۸1 مطاعظم ۲۵‏ طط .011اص۱13۔ تج اش کے رسول٭ : ا مطلے

ہے ۶ال ھاز5ہ٭ 0 0 ٤ز |٤‏ ۔ با٥0‏ لآ مقاات 8 81 ۱٢۰۷ ۵٥ ۱٥01‏ ,11ذ ئ۸ دے حا ١مصصق‏ ناما ب,حانکدے و حصواات

وکنا اور شب ن کے ورمیان ۔ ۂ

تما ی نے “یں ”لااله الله محمد الرسول الله

مرک ا اسر او ا :ہلان کی بنو گے رر صول ارڈ نم کے دین میں یا کہ جب تک میرے خلاموں کا دامن نہیں تو مھ

1

۳۷٣۷٣۷ .8310ء[011113[:113۲373.‎ 0

: مہ جا ج الش ری ہکا نر ضص۲۰۲۱ء

ھ یس نہیں یچ سکت۔ اس یکو قرآن می فرایا

”کونوا مع الصادقین' الد وانے بنا جا جج ہو کے وو ص0 ,ط۸۱13 ہ۵٥۲‏ ۰0 ۱ ٦ئ‏ ٭هام٥ەج‏ (یۃقطاتہا ۰١ط ٤ ٠ص ٥٥٥ط ۷۱٥‏ تا ١ا‏ دعط ۶٥‏ ا٥ء‏ عەعط دا۸ ۲5005٣م‏ ).ّ٥و‏ نلد5- ان گے سباتھ ہیل رہ کے لو ال دک ۱ پچ سے ای ےم ہے اعلی حضرت فرمائے ہیں : تیرے نما مو یکا شس تر سے راو غدا کے ا اگمر اں بات پر عم ل کرو گے و تمہارا ایمان تار اعخقیدر و مضبوطا ہوگا_ ٣۵٢ ٠:٥ <59۸[٥‏ 10۷0۵0 7:17 ۷۲٥۷٢ ۲۷۵٠۱۷۱۹ 5٥:‏ ع5۲00 1۳٦8‏ 0۶ا۷0

7> ٥٥ط مم قنا٥ام طا‎ 2٥۲5005, ٣٥٠٢ ٠٠٥٢

۔صعط 1۱۱۷١‏ ہ٥‏ ٭ 3۷ط ۷۱۸۵۸ اص۵ ,صعطا ٤۶ء‏ م5]۔-ٴ

اک رکوئی ىہ مجھتاے ہم ا نگو کہیں پلڑریی گے ء ان سے عحبت نی سکر مس گے ا کو0 ٭ڈل کمربیں گے نواس کو ابیمان خی ںکفذر لے گاء خیطا نکا راستتہ لے گا۔ دہ متا نج الظ مآ ان یں مناخ الشیطان گی۔

ای لیے ہ مکودنیاکی زندگی بش 20

تمہارے با کل 009٥م‏ ئنا٥م‏ زندہ ہیں ان کے نات رہہ ازع لت رازہ رک اکا کا کے

حا ہوے رہو و وو را انا و 7 مارالجدمنا صًہ دنیا ٹس جو میک زم ان کے ۱

مات بھی ہے اوج وا کے ای حر

وں ئن بی انت کیا ا گا رے۔ وی لے گیکہ تسد ت اود

ْ جا جال یی ںکنٹ یک زیر انام

جع الشریہ ےکا تغل نٹراریں اخ

ےانعقادپشہٰارگ یا2 پیش کر ة ہیں۔

روب

یس کہ جیے ہمارے بزرمگان دن دناسے ملمان گے مکوشن لکرمیں کے اس دای مان کے راستہ پھ

' یں پچھر جب جارا انتقال ہو تو وتیا نے ملمان

یں اورموت کے بعدانکوج اہ زک میں زیارت تو رکا عم اس لیے دہاکیاے۔ ْ ۱ ان وبا ی کتا 3 ذیارت ہے جس

. دیع شری ف گی اگزشتہ حمالل رما نکیا بات ہے۔

بیس بی مسپر نبوبی می داشخل ورپ نتھاتذ ایک ول آیا

ی اور میر ۓکند ھے پر ہاتھ رکھا او رکہاکہ زیارت جا مہ ۱

بھیں۔ بین نے اس نکی پاپ یکو نظ آند ا ڑکیا ور ٹیل نے بنا کام کیا (زیارت وحاض رک بارگاہ رسالت گا)۔ لے رت ات رپ اور 7٠ں9‏ انا راسۃ زکھو۔ ج ل۲ 519ا ٤4‏ ۷۵ع ا٥۷‏ ان :۵8 [یہ ٥٥ ٢١‏ ٥۲و٥٥‏ ٥ع‏ 1910180- ہاو ل کا درم لو ےک تروں کے زیششنی گے ئا کر وو لان خضوزفڈ‌تے

ہی ںک رازطر رکھواور ان کی قیرو ںکوہائی رھوں ٠‏

(والی )یلیہ تن ہی ںکہ تضورکاوصال (کا وقت تریب) ہو الو تضور ا نے چجررے پل چادر

ب1 یئ سے اور ای تج ےر کے ماد لے

ہو فرماتے کہ ببود یر لعنت ہو جننوں نے فور

کومتائؤں:ایا- وو ای ٠‏ نٹ لا ناس عدیث کے زیار تکاممح ہو نا ظاہرے۔ عالاکمہ ا ی کوک اییا کا رت وو ما مر ا وی میں نے وی کو رو ئن کے دنا کے

۱ و کک

ت

نام و ےر : اس حریث کے دو تع ہیں ایک گیا کے کہورلروں ے ین کی برے ور ین کی 1 253 7 110506 ٥ا:٥ہ٤.7٥]_'‏

4٦101 40‏ 00007 و 8(ن[5....7اە تاح٢٥٥۳٥٥١‏

۴۶٥ 09‏ م5٥۲‏ جج ٥۷ص٥1)آددہ‏ عط +مصبرححصہ کے

٥٥‏ ام۲۲ ع نا٤٣‏ م٥٥115۲‏ قہء ٥٥ا‏ تضورنے یپودیوں پر اعنتٰ اس لی ےک یک نول نے انمیاءکی قرو ںی وی نکی ات گی نک ان گی قرو ںکوڈھادیاء حا گرا مکی قیروں؟ وڑهادیا نوا کوک یاکہاجاۓ؟ ۰ ۱ دوس رامطلب ب کہ بہددٹوال نے اپ ے انھیا یاٴ روں کو بل ئا لیاتھا۔ [۹۷:.> ۷ ط٣‏ 6 ص رمعم چدنصصططەم ٭انط× 3۰١۱۷۰۰‏ طا .8٣ع ٥‏ صمٰناء”7زل تی رکو قبلہ بنانا جات تجیں ہے۔پ ہاگ قب اس ط رر ےک دای ہے یا ایی سے پا تیے ے مزع ہون ےک یکوئی وج کٹا نہیں اب میں ات یکفگمو ت مکر جا ہوں اور آسپ سے بب ہنا ہو یکم مسلک ائل سنت د جماعحت پر ات رہیں

1 اور اس یکا نام سک ایی حضرت ہے۔ اتاد سنیو کا

آئیں میس ہو سکتا ےلان آ کو گے ک ےکوک یآ پکو از جاور اک ساج تو ایا تمادا دج ہ1ا: ہے السا نمیم سکیا وکونوا مع الصادقینء گل : کت دفو کے ساخ مت روہ و اخژ دَعُوٰىهُم آنِ الْحَمْذً لِلهِ رَبٌ الْغلَمِبِنْ۔

اج اش یی نی کے زیراام ماع الشری سے ملق مقالات تل ماج الشری زنس کےانعقادیٹا اک پادپیشکر دہیں۔

ایصال‌ثواب :محمدعلی قادری4 المخانت زاہل خانه

منجانب:ڈاکٹرآمنەیٰسین واہل خانه

ا رن ہرد زا ۷ ا7 نا الا ا پر و سد سے ۔ --۔

۲۳۰٣۷٢٣۷ .310ء[10713[:1۲340۲373.‎ 0

ْ اھ و۷پ ودک ۱ تی ۱ میآہ تارج اش یی ےکا نفرش۱٢۲۰م‏

لہا را تا شر یی ہکان ض۲۰۲۱ء) ۱ آہ ٢[۸1۷۵۲۶ا‏

۸۱

)١۷۸ ۱۸‏ ۹اا

601016 5الا 53۲۱35 - تا5لا - ز8٢‏ ٤ء690٦‏ 66 ا 0 19دءی۸

231 ۸۵٤۹۶ ا‎ ۸3۳ 3 6 ینہ جا‎ ۷٢ طا٣‎ ( ۷۷ ا ۱۵۶۵ی‎ ءء١۱ا٢١‎ 8010 ۱۱٥/3٢ مە٥٣٥:‎ ٢٠٢ 0 8۲٥٢ 97ء‎

"(016666۹٤ ٣٥اأعأ٥ 5ں‎ 7 ہ٤٥٥٥‎ 13۷۱٥٣۳6٥5 |6 0 -ج۔‎ -٣315٥9ر‎ ۲٣١۱٢ ۴۱۹8 00و لوج ر۳۱۳[[091‎ ۷۸۵۲۵5۰ ٰ ٰ

٦٢۶6 ہہ :ەل‎ ١٥۴ وھ‎ ۷ ۲٥٢٥٣٥٥٤: 7٤| 0۶1 ۸۲۲۱٥۵ 3278 )) 1٤۲ (۸.م)‎ ۲۴3۵۵۶۱٥۲60 ۸۷۲۱۵۴٥ کرامنڈ یا٥5 ۶ں‎ ۸ 8823 ).۸( ۲۲٥۱٢٢ ان۲٣‎ 0 0 0 ۸۲3اما٤ 3۲۸8ا‎ ۰۰

۱۱۱٥٥٥٥٠۷ ٥٥ا٥٥‎ )٤١3٤ ٦٥:٥٥٢ ۱۸۷۴۰ ۸) 3 3مک‎ ).۸.( ١ ٥٥ ۵۹ و ٭و ومہ‎ ١ہانعا0‎ ۲٥٥٥ 80101 685 ۲٥ا٥۷‎ ۸۱۱۵8 18318

ء١ ںومم‎ ہ٤ا‎ ٥٥٥ ًاطما٥ەئا٥معئ‎ ان٥۵‎ ۷۵۱۷۲ 500۱٥۹9 8:6٤0٤ >0٥٤٣۱ا58‎ ۷٥٥۰ ۱٣ ٤ ۵۶

۰ ٥ا٥۲‏ ہہ

۸ھ

0۳٢ 070 ۸۰۶۱١ 35ا1(‎ [

۸۰۶0۲۱3۲ ۲۲۱۲٥550٢ ۲ہ 3۲۲۲۸۰۱۰۲مہ0]‎ ٥٥٥ا‎ ۲٢۲ 5ء۱٥٥٥ 06ئ) ۹ ۔ زراع۴۹۲3 ] ۳۱۷۵۴۶[۲۷ما‎

ک۴ا سیت راد - ١۵٥٢٥٢٥83۲١‏ ٥ہ‏ 1۷۵۲۶۱۲۷ہنا .٥٥٥1ء5‏ ۲ 6 ) زعاتا:

۲۳۰۷٣۷ ۳٣۷.110713[111340۲373[ء310.‎ 0

'‌ . 0 ۰

7 0ھ)] ٰ 7 7 ۱ ٦‏ ْ ۱ (غا براے جال شی فرش۱ یت ے۶ آنڑےر ۸7۸ 9 ۸۸۳۶ تھا ۲۱۷۲۸۷١7۸7 ۸۵81 7‏ ۸018117 ۱

۲۸1۰3151۰۷ ۸6ضصما 11115171016

22ے و0٣-‏ دا ء70 ٰ ْ مم تی رر ۔. ۔ ‏ ۔ ے عم تم حا ذظشمش اک را دی 080 ْ جچ ٰ

7 صدررتارج الشرییعیں کرای

الام تم ورمت انقدوبرکات

پکاگرائی نامہ ملا ٤ھ‏ ت0 .00 یں یڑ راچی کےو ام مال رع ای تا ۱ الشریتہ اخ رضاخاںتقادزیی از ہرک رمتدا تھی علی کے کیل کے مو تا خاش ک0 و اے از رگ دن دن کے اعراس دن اسلا می ان وشوکت اورا بسن تک لیت یکامظبرہوتے ہین۔

حضرت جا ج اش وو دود کے ۓےگراماورمشا عامس تاعم می مکی یقت حاصل ری گا کی ماری زنرگی مت ومن می نگ ری اور او ہر .ےہ زوا رج ا اس نام دا ے۔ بلاشیروہ ملک انت اور ہب 17 کے ہے مغ اورنرجنما تے۔امیرا ان مولا نا ماد ین روک ق ریس مر وحضرت ماج الم ہ علیہ ال ری کاؤکر ' ببت عحبت سےکمرتے ہے اورال کو اکا بر من ائل سنت میں شمارکر تے تے۔ اڈ تھا لی حضرت ماج اش دکے درجات پت فا ماے اور میں ان کے فیا نکرم ادا زارد می ری ططرف سےا با ہرک تقر یب کے انعقاد پمبارک بادقول فا س‌]ھ"س[]." رک تحالی ہمددار 00۳ کوا کا رتر پر رین اجرعطافظر فا اورام سبکولارومشا کے دن سے یش واہرکھے 0 ْ ۱ والسلام

ثروت فا

ناو بای ند ایا

۲۳۷٣۷۳٣۲۷ .10713[:11٦380۲373[ء83101‎

مہ جج الشری ہکا نف رس ٢۱‏ ٭ سم

خطہ الہ تاج النش ریہ ش۰٢۲۰‏

و یں وک قد تاج الشریعه عرس کمیٹی کراچی

الحمد للّ الحمد نڑے رب العالمین۔ ۱ الحمد للّهٴ نحمدہ و نستعینة ونستغفرہ و نومن: به و نتوکل عليه و نعوذ بالله من شرور انفسنا و دن سیاٹ اعمالنا مق بقدہ اللہ وا

یضلله فلا هادی لە و نشھد ان لااله الا اللہ َ وحذہ وحدہ وحدہ لاشریک ل4 و نشھدان سیدنا :

و سندنا و مولانا و ماونا و ملجانا و حبیبنا و طبیبنا و طبیب قلوبنا و شفیعنا وکریمنا و غوثنا و غیائنا وٴمعینا و مغیثنا و وکیلنا و کفیلنا و حفیظنا و ناصرنا و مالکنا و ملکنا و قاسمنا و قاسم زڑقتا و سینا ہا اعد رسوله۔ اما بعد فاعوذ باله من الشیطن الرجیم۔ بسم الله ری تچ الام میم و رحمت الڈد وی رکاتء

مم صد رمفل لاف اج خوری لب خلاہے جاح ال درا لاو متاح او مز مہرانا نگم ای اج الشریعہ عرس کیٹ کی ملس اتل ہکی طرف سے میں آ پکو اس کانف رس ہیں نو" آرد تا ہووں۔ آ پکا رت کہ توف

: ال انقرب کی 7 0 او رر

جج الشریعہ عر سکھیٹ یکر ا یقکی حایس تج

سے مات اتل ہوئی تی او می لی نا اننام پاپ وگرامرے۔ الئر دوہ کھیٹی کے پیٹ نظ رحضور

جا الشریعہ موان مفقی اختر رضاخاں قاددگ اذہ رگا ین خز کی ہہ ہت شخصیت اور ان کے اکر گے

الا کا الیک وج پر وگ امرے۔ :‪ جع الشریجہ صرف جنوبی الییاء کے سے ہین عفر 2 ڈیف ناندران کے فردبی نیس تھے بللہ ووبزات ود

. ایک بڈے مفسر عیرت, فقہ و مفتی اور ہر دح صول رر ط ریت تھے آ کو ور جنوں علوم وفنون پے مھارت حاصل تھی ۔آ پک علیہ أرددہ فا رکا . بنلدی اور اگریی ز پانوں یر وسنٹرس حاصل مگ اود

آپ نے نٹ ادرشاع کی یس بھیاانکااظہا کیاے۔

اع الشریعہ مرریں بھی تہ مصیف بھی سے

مقر بی ےہ اش ربھی سے. مت مکی سے نشم بھی تے_ علراء و للباء پر آپ خائش لور پہ مبریان 020 آ پک نماری زااشایہ جن یں تی آ پک جا تکاایک )۷" گاگارآى در رن فرصت

ٹش صرف ہوا۔ یہاں م ککہ دوران سر ہوا چھاز.

ٹس بھی اسلا مکی خد مت وحن اداد ہتی_ ا ائرر

مروفیات کے راو جو پاپ کے کی علاء ومشا“

سے رائیلہ جس زتج تھے پر ای ایی حضرتت سے ۸0۴0۳-۳۶۰۰۶ ا ان بے اور ان گی نار رکا امام رما نے سے ھتان وٹ ریا سر یں درف تھے ای یک یر نے ا چس ای ا

ماع الثریج ے آصلب لأ الد اور آتڑیڈے -

آپ کے مخا می نکو بھی فیا خھیں۔ کک ال خشت یر اپنے غادای بز رگو ں کی مر با رگ زندگی مضبوٹی سے تقائم ر سے اود اسی با تکی لیخت خو اس وع ام ال سض تکو فرماتے رہے۔ آپ خلاف شر امور پر فوری

ار و مس ار سا رو سے

و کی وت ےو جاح الشریعہ یی عظیم تخخصی تکی حیات و غدمات اور الگا کے الا کے لیے مم اداروں کے قیا مکی ضرورت ہے۔ نقیر اود انس کے اضباب نے ای رس پیٹ یکی ہیاد تی المقدردر جار الش نع ہکی حیات و لرکی اشاعت کے سے زیر عرس می نہ صرف ہر سال عرس ماع الشربعہ کے مو بر عحفل نا خر اور تاج الشریع کانفرنس“ کا انعقاد

کین ےکی بللہ دج ذ یلع رلیقوں سے بھی اینے مقاصد

سے عو لک یکوش کر ےکی: مابانہ مل ڈرو

-_سمت س تی

الشریبہ سے متحل یک بک اشاعتء ماع الثریب کی ایی شاو متعلقین جرح الشرں ہے روابط

یں انا کی لرکارے ‏ بلاغ کے بے مہ

کا پر جا ای میڈیا اور انٹرنیٹ پر جات اش یع کی حیات وخ مات شی یکر نا حیات د اومارجان اٹہ رپ غرمات ہُل محروف اثرار اور اذارو للا مد دوش رہ ڈعا فرماکیں الد تزالی عرسن می کے بملہ منقاصد کے تصمول می نکیا میا لی عطاف رما ئۓے_ اخ الشریعہ ع رس کببٹی کے پاس قائ او رق افرادکیھھم موجود آ نس وضسہ وروز حنت ے آرح ا حر کا ان ساےن ان ز سو

۱ ط1 0 میں بنروثست مارے

اسی علاے کے تال شر تاے۔ نج ع رسس شر ای فک مجکی شت میں تن خ انی

ہوکیہ دوسری نشت میں کلام جاج الشریہ بر شققل

”فی نڈمایں افخ رپ منعظ ہولی اور اب تیسری نشت ین آپ ماع الشرکیعہ کا نفرٹس“ کے خخطا مات سماحعت رک ہماری مفررین سے دست ہے گمزارش ےک اہ موضوم ی رکخگو کے ساتقھ سات تح الا ےجنتتا ابق لا تجات اور وائی مشابزارت کا اظہار فرایں ت کہ سب در بکارڈکا حصہ ین جئیں_ '

چھم نے اکس ع رک کی تقر یب کے دعوت نامہ کے ساتھ جاج الشری|ہ سے متعلقی تعارنی پمفلٹ شا کیا سے او رآ ج ”میلہ اج الشری کا نف ٹس “بھی حاض ری نکو نہیں )رو آپے یس متوروں ے بھی واز ی۔

کین عرں ھی آپ حرات مہ معن

رس , اراکئین ع رس می تئیہ ایل عحلہ او رب انظامےہ کے تنواو نپا گر کرت ہیں۔ الد تھالی آپ تا مکو

ججذائے نجیر عطانمرماۓ۔وما علیٹا الا البلغ المبین۔

۲۳۰۷٣۷ ۳٣۷.110713[111340۲373[ء310.‎ 0

جا الش ری رکا نف رش ۱٢۲۰ء‏

د×وص

: خلصدارت تاج لشیہکاف رش ۲۰٢۰‏ ۱ ٰ

. الھم صلی علیٰ سیدنا ومولانا محمد طِب . القلوب و دوائھا وعافیة الابدان وشفاٹھا و نور الابصار و ضیاٹھا و علیٰ اله و صحبه وسلم۔ صلی الله لی النی الامی و اله صلی الله عليه وسسلم صلوۃ ؤوسلاما علنہ ...اف الله رب محمد صلی عليه وسلما نحن عباد محمد صا ژعليه وسلما۔

ارھپ لاک مگ اس وت یہان '

اح الشثریبء وارٹ علوم اطلی حطرت, غلغہ ط فی

۱ انم ہنرںنوں مفتی انم ہن نرہ جن الاسلامء ۱

شپز و مغسرا تشم موڑانا مفتی اختررضاخان علیہ ال رص کے عرس شرف میں جح ہیں۔ مین حضرت مولانا

حافظ ش اکر تادریٰ اوران کے رتا ء کا رر ادا رم

ہوں اور مارک باو ٹین لک اہو ںک افھوں نے جضور تار الیشررہ کے دوضرے سالانہ ع رسکی حفل سال ی ہے۔ مہ ما٘ل ہم انس وج سے ا 00 اعلیٰ حضرت تیم ال رکت درم ابل سنت امام ات رضا ری وکئی اس شمعم ریس اشمارہفرمات ہیں:

سر خا وکا قد دا دہکیا ہک کے جو یہ سراں لےکہ چ

قو حفل مم یں لیے سھانے ہیں مہ نے ہز رگوں سال اواب ھی پہیایں اور جیا اہ رما ماگیا س ےک صاشأین کے وک ٹین زان نازل ہو ی ہیں_لو ٠‏ کہ خفل ضز ترک ار ا یو اج رت ہیں ۔ ان مما‌ لککا ایک اہم مقصد ىہ ہو تا ےک ہز رگو کی زن کیا کے بارے بی بایاجاے اور رہم ۱ ان کے نشی قدم پر بیلیش نشیس دبین ود نیا یکامیل ید کام انی نیب ہو۔اعلی تحضر ت بی فرمات ہی ںکہ: جرہے لا مو ں افش ق دم ے راوغد ا کیا جیپ مض ا نظ

مس سے سو-سو--- سس 81د ۔ _ وووےر _ ےہویچسیںود' وو سے سس ہومد

علامه فرحت حسن خاں قادری نوری

قرآ نکر فان ید میس سورۃ امم ہم

رو زانہ ائغ دشت پڑت یں ”اد الص ۳و اتلم“

اےالمد! یں سر ارات جلا۔ * بس ای غرم

گیاکہ ضنسیدہاراست دک“ ان اع خر بت فیا ےل

کہ ہم نے رکا رکری سال علیہ سم کےکرم

۱ سے سیدھاراستہ دبلہ فو لیے لان ہ مکمزدر ہیں گناو

ار ہیں کا رواٹ ہیں کن جلا'۔ اط حفرت ہہ فرماتے ہہوئ ےک رکاد دو عالم نے یں ۳ اط میم میننی سر ھاراستہ دکھاد یا ےلت ہیں: 9.08 ھاتے یی : سیل گیا راو دکھاتے یہ ہیں مد ہھاراستہ اص اط مت مکیاسے؟ وہ سورق فا تہ ایآ ا ان ہیر ے اص0 لوگو ں کا جن پر تو نے اضا نکیا۔ تو وہ انام یافنان کون ہیں؟ انعام یافگاغ انی ءا ہیںء ضد مین ہیںء شہرا: وہیںء صاشین ہیں ء اولیاکا ین و بز رکال دن ژیں:ء حور نوٹۓ اکا ہیں خواجہ خاجّان مین الدین شی اعمیری ہیں داتا مغ نشی علی چجوبری ہیں :رت پاپ فرید دی نکی شک ہیں اع ححضرت 7 الہ رکت ہیں ادر ان فو وولوں شہزادگان ہیں بی ضور تہ الاسلام مولانا عامم رضاغال اور کٔق ١‏ مٹیم والم الام مولانا ٠‏ راو ض۔ اسواقی 2و2 تضور اج اش رلیعہ ہیں۔ يہ انعام پافتگان

ہیں اس لیے چم ا نکافک کر تے ہیں اور ا نکی تلیمات

پر قح لکرنے کے ہے ا نکی زندگی کا مطالعہ بھی کرت ہیں اوز ای عحا٘ل بین گیا جات ہیں جہاں ان گیازن دگیاکے عالات بتاۓ جاتے ہیں۔

تفور حاح الشریعہ علیہ ال رہ و رضوان کے ارے میں وق تکی قلت کے باعث مقر اور جا

گنن کی ضرورت ے۔ نو بیس ای بے بضا عق کی وجہ

”سس _ ہسس۔۔ جج

ا فو نی کر ہیں مالین نٹ رکفت ھا راع کفشک کے لے وم

صر ٣ء‏ موا اش شر اور دم علا ء کرام موتور

نی اپ سے نکد ف ہیں گے میس آ پکو صرف یہ بتاوں گا کہ حور ماج الشری ہ کو تاج الشرییہ

کیو ںکہاگیاک بککہاکیااو رسک تن ےکہا۔

تفلا حا الشر بنا خو دکو اج الشزیعہ یں کہا۔ آ ج لوگ اپنے نام کے مات مضقی اور بڑے بڈے لق ات لگا لیے ہیں یاان کے مرییر بین مہ القابات ان کے نام کے منات لگا رت ہیں .واج الش ری ہکو جا شیع ا وق تکہاگیاجب آپ کے علم سے مہ بات ظاہ رہوگ اوراسی لے آ پکووارٹعلوم ای حضرت بھی کہامیا اور صدر ااتلاء جگ یکہاگیا۔ عرلی ذ مان پر ہارت آ پکواپنے دادا ضور پت الاسلام مولاناعامر رضاغماں سے گی۔جب تضور یہ الاعلام ع رک زبان کی گنگ فرماتے تے نے بڑے بڑے علر اگکشت بزندران رہ جات ےجب ال حرت ایت

ا ےر مہ یس عری زبان می کاب

”الرولء ار پلرادۃ لے “تیر فمالی اور ای کے

علق الائظلام نے کاب ام اھ مین “یر

تم رات لیے کے ۓیے وہاں کے لا ے گنو فرمائی اور ُردو عپار ٹیس عرلی می ں کر کے تید بقات کے سے اتوہ ران رگ ےک اس پندذکیعال مکوعرب زان د اہب می سکس پا ےکی دمتررس ہے۔ نو تضور اخ ااشریعہ نے عرل ز پان ٹیش درس ری اے داداے لی گا۔ آپ نے فقکی وی میس مہارت اور تق اپنے

زا می انم ہیر ےر حضور مفتی امش سا تی

جس کے بارے میں حضور مارح الش رجہ نے خود فرمایا: ام نک دکھھاۓ اس ز یائے می ںکوکی ایک میرے مفتی عم ظم رکا تی چو ڑکر

نے سس سس سس سس سس سے ہے سے سے ا

۲۳۰۷٣۷ ٢٣۷.10713[:1138۲373[ 3100ء‎

کہ فا ۱ ْ ا

۰ ! حفود جج الشزید نے این مم تخور ملق ۱ 8 لف مکی بحیت یکذ زۃ اور ان سے تتوی وی بج

ھی او تتوی بھی سیھا۔ تفسی کان اور دی کا فن ‏

ْ یہ ہت رضاخاں جیلالی میاں سے سلا_ حض

تضور جاح الشر جا مع الاز ہر (مھر)جانے سے لے چامعہ رضوبہ منظر اسلام می زی تیم تھے اس وقت تضور جا الشر یع

: کے والر مسر | تم جیےالی ماںدں کے رٹ

سج و جضور سخ الشزینہ انن والمد کے ساتیز نظ

۱ تھے سیپ چوہ لے انیم جہاں پ نگم اموں مخ کے نے تخرکیف .

لے جاتے زان ھی تضورحاخ اش لاسرا تج جاتے

ان جے۔ بڑائے گت اتا

ڈاۓ والر ے ے۔ یمان مان ایگ مات اود ع رض

۱ کرو کہ حر طغر ریم خلی لہ وا شوان ک : ووناء تقر پر, تی اور بس طرح سے آپ مجن

رت تھے اور بیا نکر تج آذ نظ الام کے علانۓگام . دم ہوررہ جانے تے۔ کا وق نے حعخرت

" عنم کا موی جوا ارک پنیا خیب

تھے مغ جھے معام جے اوز ای رض کے گر د

7 تے وومیرے انا مغ ام یلاک میاں کے دوست تھے تارذ عن کی ول بین دونون اھ ہو تے ۱

جھے ای مررقیہ از این مؤ لح حنشرزز مرگ

ایم ہے تقری رف مکی او رض مضو مض اٹم نے

یی فزماکی نل کی نز یز ینکر تفم نے فا اک رت ان کی زیر م نکی نے لئ ؛ چارچھ تحار یرتا رکز لو نگا- ۲ نے ا ای ۴ وو میں اج والماجرے لا

. تفورما الشریہ مامن رضوز منظر الام نے تیم نا٥‏ لککڑنے کے بعد جاخد ایر تشززیف لے

۱ کے حا زنط نی چا لگن لی :اش لکر کے 7 آتے ہیں نو ھر گکتت ہی نک جم نے مامح اہ زا

پ٢ھھاسے‏ اور جار نے یا جامف:اذہ رکا سنرے۔اور

یا کنا بھی پا ےزیو کین تال الام

اکس سے ا لین تضور جاع الٹریے' فر ات رج ےک ری مظر سے وہلانہ جھے ازہرے ذو لاج یچ مق اع مکی نظ سے طاء یل آج جو پھ ہہوں وہ تضو رمفتی مھ کی ظِ بعد کم مکی وم ہے رت او حور جا الش ری یجان نی کٹ ےکن جب دو چایس سال بعدفا يگ۵ ۲۰٢‏ پیل دوبارہ ازہر شا رر الازبر (علامہ سیر مھ طنطای) ۶۱ا گی استعالبہ ہے یں اور آ کو فھ او انڈعڈ کت ون آپ ا '٠‏ الم نت ےکن جامع ہز زکومچھی آپ پر نر ٤‏

زا تضور جا الشریجہ اسان ےکر ھک گی تھے مفسرب تھے :خر متا ان لی قد تھے : شاعم

تھے صاحب مر یقت تھے صاجب سم ڈنل تے, ۱

صاضف ۶ع ز نت کی جے جھے حضو رمفتقی یھ ےکوی تا کی گا بے الع کا مال ہو او انی کے > ج رکم مین دنا پھرتھے جید علائن ےکزام تش رای لا کات ااھٹ نع گا ذان ممو ہجو تھا انا لام ومشان من او ایی حضرزت بر پا ٹف مم ولا برا ن رگن عل ری ارد مر ضا اک العازڑای: صرر| اعلماء مولانا لام یلال می شھی اور دز ہہت سے لونک ےن پاکنتان بیتیے اروا مار تاری رتا اط خاگی حطیف لیب ۃمولانا ین گی رضوتی:(کین آؤز ون علاء پان ہمونجر تھے نا چم میں ہت بر ن ئطات نے مہ اعلا نیز رو

ملق ریم ہنز کے لم ویش ہے نے این ماج الشرزینز خو(ان ملق تترزدزضا ان فی نکی یبا ال٠‏

۱ وت ا او ضنا شن الناے تڑھگ گول اوڑصا ھن

فلنک الاو زا متا م ذش نکی ڈو نین ےت اش لق نم جح اش کان" جد ملا شا نآ کان ون

جب 1۹۹۸ء لی حا ای کی رت ا ے تے او میں و ان انز مھدم نے بچیگی مر لیر ہنا تھا

بت ہش اید

گج الش ری کان اجوپ ٠‏

کت ۰ک دہائی می ا نکو جا الش رجہ کےلقب سے شہرت جال کی جار الش ریت ہآ پکو ید علاونے ایک وع پر اجخائی طور یر فرمایاہ آ پکو ٦ے‏ ہز رگوں سے علومء ء ون اور نتڑیٰ ملا۔ اگ ححقرت خود بہت بڑے جامح علوم وفنون تھء اور ان

' کے دوٹول شب ادگان بھی اح علوم وفنون تے اور ان

کے نی مغم اٹم جیلالی میاں بھی جا علوم وفنون تے تو جا الش ری کو سب ازغابز گول ماد _ یز شا ریم بھی آ پکو اپنے پروی سے

حصہ ملاف۔+1۹۸وکی د کی یس آپ کے نلے تخریف ٠‏

لے گے تو سودی تلو مت نے آپ پر ہے نا ٣‏ مککیاہ با بنلدئی لگاکی آورکہ بمتفرے ظاب زرو ما نز(" کہ ہخدتاج وا گج دیل۔ ان مک رس ے9ةَ ُ کلام تکاس کان تن ۱ :ماع کے ددینے اخ کی رر ون فادی:.٠‏

7 سائکن ذداقزیغ ےم نفبل جانا ا شع نما فزمائنے ب یکم کیا سے یعرز مو * حاضریکی) آرزوب رکاکرمم می الہ توالی علی وم"

ریا خر ایی کے اتکی نزو ال طز پورگ

ہل طرف تشریف لان لو ۱ ہنددستان بن پرے مال الام یس (ان سعوزی قل ‏ کے خلاف )با تاج ہو اٹ سے بووی علومے“

ٹن نے ےہ جبور ہلآ پکو سوج دیو سار یکیا -

اورا۔ آپ ذاع موہ تخریف نے گے ذ وزرآ ۱ تاحیات ڈاان ارت نٹ مال فق سککی کی زار ز آپ ڈ ہکن پش ریت نل خآتے ج : لین ناقری : رز اتاج نپ مکی طر ریت ےگرقب> زمادز خوش تھے ای کلام کے اشعار نے تھے ےیمرکے نے کاپانکن مزہ خرے در 5 : .او لیب مج اینۓ فضا تھڑے:۔ : ۰۱ تال کورا شا ر ملا نے یع مت ہک یاعیائب جل ت نت کاو رج راز : زا ...الع کے زنیج كمتز جار دن پٹ

۲۳۷٣۷٢٣۷ .10713[11۲30۲373[ .8310ء‎

مہ جا الشری کا نفرش ۲۰۲۱ء

2ء۶

ام سے پچ مکوطیبہ لے میں خی رآ یی ا

حعاضرین کرام ا ہم سب یہاں جا الاسلام

وا سلمینء می انتعنانی اانرسیدر می ماج الش یج علی ارہ ے ع رسکی کل عافریں ےرت ہہت نے کے نیس فرائۓے؛آین۔ مس اج الشریہ خر سکھیٹی

7 کے اصاب اور با خصوص خلفہ جع ..

عامہ مولاناحافظہ مجر شاک تادری ید خل کو دو لکی اتا

گراوں سے مارک باد شی کرجا ہوں کہ انی توبصورت ار اڑدے مرش رکرمم 2 ع رسکی ایل

تقری بکوسجایا۔ادڈد رب العز تآآ پک عھرش مزید

برکمت عطا نا اد اناج اریہ کے زعالی فیضان سے می الامال فڑما ئۓ۔

رٹ جح الش ریت ایب جائح الات

سے و ...۳ النا٠ے‏ ٤‏ 7*۶ اوک رکیاجاے او رگن اوصا فکا گر کیا جواے۔ نیہاں ڈگ فلز خطاب تر کے ولا ٠‏ گی مج ےک جا الش یی شخصی تکھی ہے ہیں

جعثری کی عبت گا کت ات بے حر ال اور ٹل متا ہو کہ جہادے یا لوج یھ سے ود ا

پھ “کی برک تک دجہ سے ہے۔ ال نچ“ ے ایا

ما لکردیا ےکہ ہم ججان جاتے ہیں میک کک یی '

کرت ہیں اس" رکاش تعالی ددام ہنا سے اورا ٠‏ گل کو متبولیت مل جال ی ے 1 و

پا سے ممسرے یہ خوشبد ای پچھذ لکی سے اود ال وو می بات ےج کا فکرانےکا

یپ

ےنا عیب ہکو پاکر ہوں میں شادمال ۱ می رااخ رد خنثال ہو اتیرے

٤

-10۔

ما علینا الا البلغ المبین۔

اڑکالر جن الاسلام جا الشراعہ

مفق محمد عدیل رضا قادری رضوی

ضرورت کڑیں ے۔ یہ خود ہی دلوں میں سا ای ےء

ذہنو ںکو خوو معط رکرد تی ے۔ مرش کر مم (جاع "شر )مرا وی جہن می عام پیام شہ امررضا ار جا الشثریع ٢‏ کی ورک زندگی یی سے یی ان کی گارے اور بجی زیازگی ز ری زار ےکا ررۓ۔ لوولئ ےئ الۓ لۓے اخ نے ان " مقاصد بناۓ ہو ۓ ہیں کہ جماراہ مقصمد ہے جمارادہ

مقر ہے جم یزفہ ھزشو گرم (مارع الشریعقہ) ے.

عر کیا کہ چحخمور ہراری زندگی کا کیا مقصید ہونا جابے ء فرمایا:

ا ےجہان ٹل عام پامم شہ ات ضا دی

پل ٹفکر چیہ دماگھیں پچھرسے تر ید وڈاکر دیی

کون سا پغام ایل جقرت امام ات رضاعا مکرنا۔

سے ؟ کک اور سور کو عا مکر نا سے ؟ اپنا مقصر حیال تکیا